بمبوریت سے چرائے گئے بکریوں کو چترال پولیس نے برآمد کرلیا

چترال (زیل نمائندہ)  چترال پولیس نے عید الاضحی سے دو دن قبل وادی بمبوریت کے چراگاہ سے چھینے گئے 30بکریاں دروش کے علاقے میں قائم مویشی منڈی سے برآمد کرکے ارندو کے باشندے کریم حسین ولد محمد شاہ کو ان کے دو شریک جرم ساتھیوں صاحب نادر ولد محمد زادہ ساکنہ جنجریت اور اسماعیل ولد نوروز ساکنہ ایون کو گرفتار کرلیا۔ پولیس ذرائع کے مطابق پولیس اسٹیشن بمبوریت میں 54بکریوں کے چھینے جانے کی ایف آئی آر نامعلوم ملزمان کے خلاف درج ہوئی تھی۔ ذرائع نے بتایاکہ افغان بارڈر کے قریب بکریاں چھین کر ملزمان نے یہ تاثر دینے کی کوشش کی تھی کہ واردات میں پہلے کی طرح افغانستان سے تعلق رکھنے والے لوگ ملوث ہوں گے لیکن اس دفعہ پولیس نے ارندو تک کے سرحدی علاقوں کی کڑی نگرانی کی اور معلومات کے حصول کے لیے نیٹ ورک پھیلادی جس کے نتیجے میں چھینے گئے چند بکریاں دروش میں مویشی منڈی سے برآمد ہوئے جس پر ملزم کریم حسین کی گرفتار ی عمل میں آئی جس نے ساتھیوں کے نام بھی اگل دئیے۔ ملزم کریم حسین کو مقامی عدالت کے سامنے پیش کیا گیا جہاں انہوں نے ضابطہ فوجداری کے دفعہ 164کے تحت اقرار جرم کرلیا ہے۔اس موقع پر ملزمان سے  باقی بکریوں کی قیمت 2لاکھ 95ہزار روپے برآمد کرلی گئی۔  ڈی پی اولوئر چترال عبدالحئی خان نے کہا ہے کہ یہ اپنی نوعیت کا پہلی واردات تھی کہ جس میں ملزمان نے کامیابی سے دھوکہ دینے کی کوشش کی تھی کہ واردات میں افغان باشندے ملوث ہیں کیونکہ ماضی میں ایسے واقعات رونما ہوتے رہے ہیں لیکن چترال پولیس کی شبانہ روز کوششوں اور محنت کی وجہ سے اس کیس کو ایک ہفتے سے بھی کم وقت میں حل کرنے میں کامیابی ہوئی ہے۔

زیل نیوز میں شائع مضامین اور کمنٹس سے ادارے کا متفق ہونا ضروری نہیں
118690cookie-checkبمبوریت سے چرائے گئے بکریوں کو چترال پولیس نے برآمد کرلیا

کالم نگار/رپورٹر : نور افضل

Share This