موجودہ صوبائی حکومت کے دور میں بھرتی ہونے والے37ہزار اساتذہ مستقل

پشاور ( نمائندہ زیل)خیبر پختونخوا حکومت نے سال 2013ءکے بعد نیشنل ٹیسٹینگ سروس(این ٹی ایس) کے ذریعے مختلف کیڈرز کے کنٹریکٹ اور ایڈہاک بنیادوں پر بھرتی ہونے والے 37ہزار اساتذہ کومستقل کرنے کی منظوری دید ی ہے جس کا اطلاق ان کی بھرتی کی تاریخ سے ہوگا۔اس امر کا اعلان محکمہ ابتدائی و ثانوی تعلیم خیبر پختونخوا کی جانب سے جاری کردہ ایک اعلامیے میں کیا گیا۔مستقل ہونے والے مرد و خواتین اساتذہ میں 4211 ایس ایس ٹیز، 4194سی ٹی،1085 ڈی ایم،848پی ای ٹی،851ٹی ٹی، 1205 اے ٹی،801قاری اور 21195 پی ایس ٹی ٹیچرز شامل ہیں جبکہ پراجیکٹ میں این ٹی ایس پر بھرتی ہونے والے مستقل ہونے والے اساتذہ میں 73سینئر آئی ٹی ٹیچر، 759 آئی ٹی ٹیچرزاور1144لیب انچارج شامل ہیں۔مستقل ہونے والوں میں 2013ءکے بعد محکمہ ابتدائی و ثانوی تعلیم میں بھرتی ہونے والے جونئیر کلرک بھی شامل ہیں۔وزیرتعلیم محمد عاطف خان نے مستقل ہونے والے اساتذہ کو مبارکباد دیتے ہوئے کہا ہے کہ ملازمین دوست حکومت نے اساتذہ کرام کے ایک اورمطالبے کوعملی جامہ پہنا دیا ہے۔یہ اس امر کا واضح ثبوت ہے کہ حکومت تعلیم کے فروغ اوراساتذہ کی فلاح و بہبود کے لیے سنجیدہ اور ٹھوس اقدامات کر رہی ہے ۔

زیل نیوز میں شائع مضامین اور کمنٹس سے ادارے کا متفق ہونا ضروری نہیں
58310cookie-checkموجودہ صوبائی حکومت کے دور میں بھرتی ہونے والے37ہزار اساتذہ مستقل
Zeal Mobile Reporter

کالم نگار/رپورٹر : زیل نیٹ ورک

http://zealnews.tv/wp-content/uploads/2016/10/favicon-300x300.png
زیل نیوزڈیسک چترال کے جانے مانے صحافیوں اور لکھاریوں پر مشتمل ایک ٹیم ہے جو کہ صحافتی میدان میں ایک نمایاں مقام اور نام رکھتے ہیں۔ ان کی ہمیشہ کوشش ہوتی ہے کہ خبر ہمیشہ سچ ہو اور اسلامی نظریہ اور نظریہ پاکستان سے متصادم نہ ہو۔
Share This