لب کشائی

طاہر الدین شادان کا تعلق تورکہو کے علاقے کھوت سے ہے۔ وہ ایک محب وطن اور اعلی اقدار کے مالک خوبصورت کالم نویس ہیں۔ وہ ہمیشہ معاشرتی پہلووں پر قلم کشائی کو لب کشائی کے عنوان سے منظر عام پر لاتے ہیں

ائمہ کے لیے اعزازیہ اور چند حقائق

گزشتہ دو ڈھائی مہنیوں سے جہاں اخبارات ٹی وی چینلز اور سوشل میڈیا میں گورنمنٹ آف پختونخوا کے ائمہ کے لیے اعزازیہ کے اس اقدام بہت زیادہ سراہا جا ر ہا ہے وہاں کچھ لوگ ائمہ کے لیے ماہانہ دس ہزار اعزازیے کو ائمہ کے ساتھ مذاق قرار دے کر اس کی شدید مخالفت کر رہے ہیں چونکہ خیبر پختونخوا ...

مزید پڑھئے

اپر چترال کے عوام کو جاگنا ہوگا

لگتا ہے کہ وفاق اور صوبے کی رسہ کشی کے نتیجے میں اپر چترال مزید لمبے عرصے تک بجلی سے محروم رہے گا۔ واضح رہے کہ واپڈا کی طرف سے پیڈو پر زور دیا جا رہا ہے کہ وہ پیڈو واپڈا سے بجلی خرید کر ریشن بجلی گھر کے صارفین کو بجلی فراہم کرے لیکن تاحال صوبائی حکومت کا ادارہ ...

مزید پڑھئے

ڈی پی اور چترال کے نام

جناب والا ! گزشتہ دنوں ڈی پی او چترال علی اکبر شاہ کا تبادلہ ہوا جس کی جگہ نئے ڈی پی او کے طور پر آپ کی چترال آمد یقیناًہم سب کے لیے باعث مسرت ہے جس کا اندازہ آپ نے چترال میں داخل ہوتے ہی لگایا ہوگا۔ محترم سر !چترال کے لوگوں نے جس انداز میں آپ کا استقبال ...

مزید پڑھئے

کریڈٹ کی جنگ ۔ ایک اور عجوبہ

گزشتہ کئی سالوں سے وادی چترال بجلی کی نعمت سے محروم ہے اس دوران یہاں کے عوام نے کئی اہم ناموں کو اور پارٹیوں کو بطور ممبر آزمانے ک کوشش کی لیکن عوام کی قسمت نہیں بدلی۔ برق رفتار ترقی کے اس دور میں بجلی جیسی نعمت سے محرومی یقیناً کسی بدقسمت قوم کے حصے میں ہی آتی ہے ۔یہاں ...

مزید پڑھئے

سلیم خان ،توہین رسالتؐ ، گستاخ اور اسماعیلی

گزشتہ دونوں چترال میں پیش آنے والے دو واقعات نے ایک بار پھر مسلمانوں کے جذبہ ٔ ایمانی کو مجروح  کیا ہے۔ اس سے قبل جب اسماعیلی کمیونٹی کے سنجیدہ لوگ اپنے امام کی آمد کے سلسلے میں تیاریوں میں مصروف تھے۔ میں نے چند کلمات چترال کے باہمی ہمدردی اور ایک دوسرے کے جذبات کے احترام کے حوالے سے ...

مزید پڑھئے

ہزہانئس کی آمدِ چترال اور مذہبی ہم آہنگی کو فروغ

اسماعیلیوں کے روحانی پیشوا  ہزہائنس پرنس کریم آغا خان ان دنوں چترال اور گلگت کے دورے پر آرہے ہیں چونکہ پرنس کریم آغا خان کئی سال بعد آرہے ہیں ۔ظاہر ہے اس موقع پر اسماعیلی برادری کے پندرہ سال سے کم عمر افراد پہلی بار اپنے امام کا دیدار کریں گے۔  اس بات سے ان کے جذبات و احساسات کا ...

مزید پڑھئے

چمکتے تارے ۔۔۔۔ آخری قسط

وادی  چترال میں ہر تیسرے چوتھے مہینے کوئی نہ کوئی ایسا مریض سامنے آتا تھا جو غربت کی وجہ سے علاج معالجہ سے قاصر ہوتا تھا یہ سلسلہ اب بھی جاری ہے بعض لوگ ان میں سے ایسے ہوتے ہیں جن کے پاس سرے سے علاج کے لئے پیسے ہی نہیں  ہوتے جبکہ بعض ایسے لوگ ہیں جو علاج کراتے ...

مزید پڑھئے

چمکتے تارے(دوسری قسط)

عنوان سے تعلق رکھنے والی دوسری شخصیت مولانا عماد الدین کا تعلق دنین چترال سے ہے مولانا صاحب کے بارے میں پہلے پہل مجھے آگاہی اس وقت ہوئی جب ہم سنگور سے تعلق رکھنے والی ایک  یتیم کینسر کی مریضہ بچی کے علاج معالجے کے لئے چندہ اکھٹے کر رہے تھے اس دوران میرا روزانہ کی بنیاد پر عزیزم اقرار ...

مزید پڑھئے

چمکتے تارے

دنیا کے کسی بھی معاشرے میں اچھے برے،نیک و بد ،شریف و شریر، پڑھے لکھے و جاہل اور سنجیدہ و غیر سنجیدہ لوگ بستے ہیں صرف بستے ہی نہیں بلکہ معاشرے پر اثر انداز بھی ہوتے ہیں ایک اچھا انسان جہاں رہتا ہے اس کی اچھائیاں صرف اس کی ذات تک محدود نہیں رہتیں بلکہ اس انسان سے وابستہ دوسرے ...

مزید پڑھئے

ایک” پُل” سارے شہر کو ویران کر گیا

وادی ریچ اور اجنو کو ملانے والا پل گزشتہ رات نامعلوم افراد نے جلا کر جہاں علاقے کے لوگوں کو پریشانی میں مبتلا کردیا ہے تو وہاں سرکاری پراپرٹی کو نقصان پہنچا کر جرم کا بھی ارتکاب کیا ہے اب چونکہ اس بارے میں کچھ کہنا قبل ازوقت ہوگا کہ ان نامعلوم افراد یا فرد نے پل کو کیوں آگ ...

مزید پڑھئے